Father Poetry and Quotes in Urdu

Father Poetry and Quotes in Urdu
Father Poetry and Quotes in Urdu

Father Poetry in 2 lines

Mujhko chanv me rakha ur khud jalta rha dhoop me
Maine dekha hay ek farishta baap k roop me

مجھکو چھاؤں میں رکھا اور خود جلتا رہا دُھوپ میں
میں نے دیکھا ہے اِک فرشتہ باپ کے رُوپ میں

Likhte likhte kalam hi suukh gaya
Mere baap ki tarifon ka bhi jawab nahin

لکھتے لکھتے قلم ہی سوکھ گیا
میرے باپ کی تعریفوں کا بھی جواب نہیں

Baap ki daulat nahin
Saya hi kafi hai

باپ کی دولت نہیں
سایہ ہی کافی ہوتا ہے

Aziz tar wo mujhe rakhta hai rag e jaan se
Ye sach hai ki mera baap kam nahin maa se

عزیز تر وہ مجھے رکھتا ہے رگِ جاں سے
یہ سچ ہے کہ میرا باپ کم نہیں ماں سے

Best Quotes

Bhule se bhi chhodo na kabhi baap ki ungli
Ye Shama tumhen raah dkhane ke liye hai

بُھولے سے بھی چھوڑو نہ کبھی باپ کی انگلی
یہ شمع تمہیں راہ دِکھانے کے لیے ہے

Apni jaan bhi vaar dun nazar aane mein
Koi mange jo mujhse sadka mere baap ka

اپنی جان بھی وار دوں نظر آنے میں
کوئی مانگے جو مجھ سے صدقہ میرے باپ کا

Baap zeena hai jo le jata hai unchai tak
Maa dua hai jo sada saya fagan rahti hai

باپ زینہ ھے جو لے جاتا ھے اونچائی تک
ماں دعا ھے جو صدا سایہ فگن رہتی ھے

Door rahti hain sada unse balain sahil
Apne man baap ki jo roj dua lete hain

دور رہتی ھیں صدا ان سے بلائیں ساحل
اپنے ماں باپ کی جو روز دعا لیتے ھیں

Hamein padhao na rishton ki koi ur kitaab
Padhi hay baap k chehry ki jhurriyain hamne

ہمیں پڑھاؤ نہ رشتوں کی کوئی اور کتاب
پڑھی ھیں باپ کے چہرے کی جھریاں ہم نے

بابا کے کندھے پر چڑھ کر
جیسی نظر آتی تھی ویسی نہیں ہے دنیا

جو اپنے ماں باپ کا
فرمانبردار نہیں ہوتا کمبخت وہ
جنت کا حقدار نہیں ہوتا

مُدت کے بعد خواب میں آیا تھا میرا باپ
اور اس نے مجھ سے اتنا کہا خوش رہا کرو

یہ سوچ کے ماں باپ کی خدمت میں لگا ھوں
اس پیڑ کا سایہ میرے بچوں کو ملے گا

گھر لوٹ کے روئیں گے ماں باپ اکیلے میں
مٹی کے کھلونے بھی سستے نہ تھے میلے میں

ماں باپ اور استاد سب ہیں خدا کی رحمت
ھے روک ٹوک ان کی حق میں تمہارے نعمت

ان کے ہونے سے بخت ھوتے ہیں
باپ گھر کے درخت ھوتے ہیں

دیر سے آنے پر وہ خفا تھا آخر مان گیا
آج میں اپنے باپ سے ملنے قبرستان گیا

گھر کی اس بار مکمل میں تلاشی لوں گا
غم چھپا کر میرے ماں باپ کہاں رکھتے تھے

• Wasif Ali Wasif Quotes

کبھی باپ کے آنسو تمہارے دُکھ سے نہ گریں
ورنہ رَب تمکو جنت سے گِرا دے گا۔

باپ ایک ایسی کتاب ہے
جس پر بہت سے تجربات تحریر ہوتے ہیں
جو زندگی گزارنے میں رہنمائی کرتے ہیں
اس لیے اُسے اپنے سے کبھی دور مت رکھیں۔

والد کی سختی برداشت کرو
تاکہ باکمال ہو سکو تاکہ خدا تمکو دُنیا میں بُلند کرے۔

ایک مُدت سے پُکارا نہیں ابو کہہ کر ایک مُدت سے ہوا ہے یہ لفظ رُخصت گھر سے،
یااللہ جن جن کے بابا اس دنیا سے پردہ فرما گئے ہیں اُس سبکو جنت میں اعلیٰ مقام عطا فرما، آمین۔

باپ کے سائے سے بڑی دُنیا میں کوئی نعمت نہیں۔

بابا ! آپ نے دیکھا ،
اب میں درد چُھپانا سیکھ گیا
اب میں مُسکرانا سیکھ گیا۔

زندگی اور حالات جب تھکا دیتے ہیں
اس لمحے ابو کی یہ بات ہمت اور حوصلہ بڑھا دیتی ہے
کہ میرا بیٹا بہت بہادر ہے۔

Father Quotes In Urdu

گھر پے باپ کی آواز بھی بڑی نعمت ہے، اور
دروازے کے باہر باپ کی جوتیوں کا اپنا ہی ایک روب ہے۔

کہہ رہی ہے مجھے یہ کل کی بہو
آپ میرے میاں کا کھاتے ہیں۔

کہتے ہیں
انسان اپنا پہلا پیار کبھی نہیں بھول سکتا
پھر لوگ کیوں اپنے والدین کو بھول جاتے ہیں۔

قدر کیجیے ان ہاتھوں کی
جن ہاتھوں نے ہماری بنیادیں مضبوط کرتے کرتے اپنے ہاتھوں میں
لاٹھیاں اور تسبیح پکڑ لی ہیں قدر کیجیے اپنے والدین کی۔

میرے قدم کیسے ڈگمگا سکتے ہیں
مجھے تو چلنا میرے بابا نے سیکھایا ہے۔

لڑکیاں اپنے باپ سے زیادہ پیار اس لئے کرتی ہیں کیوں کہ
وہ جانتی ہیں باپ دنیا کا وہ شخص ہے جو کبھی انہیں دھوکا نہیں دے سکتا
اللہ پاک سب کے سروں پر باپ کا سایہ سلامت رکھے، آمین۔

جب رزق میں تنگی محسوس ہو تو غور کر لیا کرو
کہ ماں باپ کے لیے دعا کرنا تو نہیں چھوڑ دی۔

ماں باپ دنیا کی ہر ٹھوکر برداشت کر سکتے ہیں
سوائے اولاد کے ہاتھوں لگی ٹھوکر کے۔

اپنے ماں باپ سے اونچی آواز میں بات مت کیا کرو
جس دن وہ خاموش ہو گئے اس دن تم اُن کی آواز سُننے کو ترسو گے
اللہ سب کی اولاد پر اُن کے ماں باپ کا سایہ سلامت رکھے، آمین۔

باپ کی موجودگی سورج کی مانند ہے
سورج گرم تو ضرور ہوتا ہے مگر
سورج نہ ہو تو اندھیرا چھا جاتا ہے۔

اگر تم ستر سال تک خانہ کعبہ کا طواف کرکے اسکی نیکیاں اپنے ماں باپ کو ہدیہ کرتے رہو
تب بھی اُس ایک آنسو کے قطرے کا بوجھ ہلکا نہیں کر سکتے
جو تمہاری بد سلوکی کی وجہ سے تمہارے ماں باپ کی آنکھ سے گرے۔

اپنے باپ کا حکم مانو تاکی خوش حال ہو سکو۔

باپ کے سامنے اونچا نہ بولنا
ورنہ اللہ تمکو نیچا کر دے گا۔

باپ ایک مقدس محافظ بھی ہے
جو سارے خاندان کی نگرانی کرتا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *